جنگ گروپ اور ہارپ کانسپیرسی تھیوری

Nov 7th, 2012 | By | Category: Jang, Urdu Media, اردو

پاکستان میڈیا واچ کی ٹیم اپنے قارین کی توجہ مندرجہ زیل کالم کی جانب مرکوز کروانا چاھے گی۔

Nusrat Mirza Jang ColumnNusrat Mirza Jang Column 2

نصرت مرزا صاحب کا یہ جنگ اخبار کا کالم ۔ جو کہ ایک اخباری کالم کم اور سائنس فکشن کا ناول زیادہ معلوم ہوتا ھے۔ پاکستان میڈیا واچ کی ٹیم اس کالم کو مدنظر رکھتے ھوئے چند اہم نقات اٹھانا چاھے گی۔

اول اور سب سے اہم بات یہ ھے کہ کانسپیرسی تھیوری کئی بار ڈی بنک یعنی کہ بے نقاب ھو چکی ھے۔  ایک بار صرف گوگل کرنے پر ہارپ تھیوری کا پول کھل کر سامنے آجاتا ھے۔سوال یہ اٹھتا ھے کہ کیا یہ کالم کسی چھوٹے موٹے کانسپرسی بلاگ میں چھپا ھے یا جنگ اخبار میں جو کہ کافی اثر رسوخ رکھتا ھے۔ کیا ایسے کالم کو چھاپنا غیر ذمہ داری کا ثبوت نہیں ھے۔ اگر اس طرح کے کالم اخبار میں چھپیں گے تو اس سے اخبار کے ایڈیٹر پر کیسے منعکس ھو گا کہ ایسی چیزیں کالم تک پہنچ گیئں۔

دوم اس کالم کے چھپنے کے ایک ہفتے بعد معمول کے مطابق امریکہ میں انتخابات ھوئے کوئی مارشل لا نہیں نافظ ھوا اور وہ سب چیزیں جو کہ کالم نویس نے کہیں بالکل غلط ثابت ھوئیں۔ کیا جنگ گروپ یا کالم نگار یہ بات بتانا پسند کریں گے کہ انھوں نے یہ سب کیوں لکھا اور چھاپا یا اسی موضوع پر اپنی وضاحت پیش کریں گے۔ اگر نہیں تو کیا وہ قارین کو گمراہ کرنے پر معافی مانگیں گے۔

ثوم اس طرح کی غیر ذمہ دارانا ایڈیٹرنگ سے جنگ اخبار نے خود اپنی ساکھ اورشہرت پر ھتھوڑا مارا ھے۔ کیا ایسے کالم کے شائع ھونے کے بعد کوئے با عقل اور با شعور آدمی جنگ اخبار کو پڑھنا پسند کرے گا۔

چہارم کالم نگار اپنے کالم میں کہتے ھیں کہ چند ماھر لوگ یعنی ایکسپرٹ لوگ ان سے متفق ھیں۔ کیا نصرت مرزا صاحب ان ایکسپرٹ لوگوں کے نام بتانا پسند فرمایں گے تاکہ مستقبل میں ایسی ماہرانہ رائے سے بچا جا سکے۔

پنجم کیا ماضی میں ایسی قدرتی آفتیں نہیں آئیں اور کیا وہ بھی امریکہ میں موجود ہارپ ٹیکنالوجی کا تحفہ تو نہیں تھا۔ کیا کالم نگار اور جنگ گروپ ٹیکٹانک پلیٹس کی شفٹنگ سے واقف ھیں یا وہ بھی امریکہ کی کارستانی ھے۔

پاکستان میڈیا واچ کی ٹیم قارین کو ان سب باتوں پر غور کرنے کے لیئے کہے گی اور جنگ اور دیگر اخبارات کو ذمہ دارانا رویہ رکھتے ھوئے قارین کو گمراہ نا کرنے کی التجا کرے گی۔

Tags: , , , ,

Leave Comment

?>